0

یوم تکریم شہداء کی مناسبت سے جناح سندھ میڈیکل یونیورسٹی کے زیر اہتمام واک

انہوں نے کہا کہ پلے کارڈز اور بینرز کو تشویش تھی جن پر شہدائے پاکستان کے اظہار یکجہتی کے پیغامات درج تھے۔
انہوں نے کہا کہ پلے کارڈز اور بینرز کو تشویش تھی جن پر شہدائے پاکستان کے اظہار یکجہتی کے پیغامات درج تھے۔

یوم تکریم شہداء کی جدوجہد سے جناح میڈیکل یونیورسٹی کے طلباء و طالبات اور پاکستان کی طرف سے واک اور سپاہی مقبول حسین پر ڈرامہ پیش کیا۔

جناح سندھ میڈیکل یونیورسٹی نے سانحہ 9 مئی اور یوم تکریم شہداء کی قربانیوں سے وائس چانسلر پروفیسر امجد سراج میمن کی قیادت میں عسکری 3 کے مرکزی گیٹ سے جے ایس ایم یو کے مین گیٹ تک ریل کا حق ادا کیا۔

دوبارہ میں طالب علم اور طالبات کو جواب دینے اور عمل کرنے نے بھی شرکت کی۔ انہوں نے پلے کارڈز کے بارے میں تشویش کا اظہار کیا اور جن پر شہدائے پاکستان کے اظہار یکجہتی کے پیغامات درج تھے۔

اس موقع پر ملک کی سلامتی کے حق میں نعرے بھی چلائیں واک کے انتخاب سے خطاب میں پروفیسر امجد سراج میمن نے کہا کہ ملکی ایجنسیوں پر تنقید نہیں ہونی چاہیے، شہدائے بے عزتی کی بے عزتی، ہمیں آزادی ملی کے بعد بڑی قربانیوں کے بعد، ہمیں آزادی کی حفاظت کرنا ہے۔

اس موقع پر جامعہ میں اسٹوڈنٹ کونسل نے کیس نمبر 335139 سپاہی مقبول حسین پر ڈرامہ پیش کیا۔ تقریب میں ناز خصوصی کے معاون خصوصی قاسم سراج سومرو، پروفیسر طارق محمود، رجسٹرار ڈاکٹر اعظم خان، ڈاکٹر راحت نے بھی خطاب کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply