0

سانحہ 9 مئی کے ذمےداروں کیخلاف آرمی ایکٹ کے تحت قانونی کارروائی شروع کردی: آرمی چیف

فوج اور عوام کے درمیان دراڑ کی کوشش ریاست کے خلاف عمل، ایسا عمل کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا: جنرل عاصم منیر— فوٹو: آئی ایس پی آر
فوج اور عوام کے درمیان دراڑ کی کوشش ریاست کے خلاف عمل، ایسا عمل کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا: جنرل عاصم منیر— فوٹو: آئی ایس پی آر

آرمی چیف جنرل عاصم منیر نے کہا ہے کہ 9 مئی کے منصوبہ سازوں کے خلاف آرمی ایکٹ کے خلاف قانونی کارروائی شروع کر دی گئی۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل عاصم منیر نے لاہور کا تجربہ کیا اور انہیں 9 مئی یوم سیاہ کے واقعات پر بریفنگ دی گئی۔

آئی ایس آر نے کہا کہ نشان نے یادگار شہدا پر ترقی اور مادر وطن جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے شہداکوخراج پیش کیا۔

فوج نے جناح ہاؤس اور ایک فوجی تنصیب کا بھی جائزہ لیا۔

اس موقع پر فوجداری کا کہنا تھا کہ 9 مئی کے ذمہ داروں کے خلاف آرمی ایکٹ اور آفیشل سیکرٹ ایک کے تحت قانونی کارروائی شروع کردی گئی۔

انہوں نے کہا کہ پاک فوج کی طاقت اس کے عوام، فوج اور عوام کے درمیان دراڑ ڈالنے کی کوشش کے خلاف عمل ہے، ایسا عمل کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا۔

جنرل منیر کا کہنا تھا کہ دشمن قوتیں اور ان کے حامی فیک نیوز پروپیگنڈے کے انتشار کی کوشش کرتے ہیں، قوم کے تعاون سے دشمن کو عاصم کے تمام عزائم کوناکام بنا دیا جائے۔

آرمی فائی نے سروسز ہسپتال لاہور کا بھی منظر کیا— فوٹو: آئی ایس پی آر
آرمی فائی نے سروسز ہسپتال لاہور کا بھی منظر کیا— فوٹو: آئی ایس پی آر

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی پبلک سروس ہسپتال لاہور کا بھی جائزہ لیا گیا اور 9 مئی کو زخمی ہونے والے آئی جی ناصر علی رضوی کی عیاادت کی فوج نے قربانی لائنزکا بھی کیا اور پولیس سے ملاقات کی۔

فوج نے پولیس کے شہدا کو خراج عقیدت پیش کیا جبکہ انہوں نے فسادات، توڑ پھوڑ کے دوران پولیس کی ورانہ مہارت کوسراہا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply