0

یوکرینی صدرولادی زیلنسکی عرب لیگ اجلاس میں شرکت کیلئے جدہ پہنچ گئے۔

یوکرین میں روسی جارحیت کے خلاف امن منصوبہ پیش کرنا: زیلنسکی — فوٹو: عرب نیوز
یوکرین میں روسی جارحیت کے خلاف امن منصوبہ پیش کرنا: زیلنسکی — فوٹو: عرب نیوز

یوکرینی صدر ولادیمیر زیلنسکی سعودی عرب میں جاری عرب لیگ اجلاس میں شرکت کیلئے جدہ پہنچ گئے۔

عرب میڈیا کی رپورٹس کے مطابق یوکرینی صدر فرانس کے خصوصی خطے میں پولینڈ سے سعودی عرب، وہ عرب لیگ سربراہی اجلاس میں خاص خصوصی شرکت کریں۔

اس موقع پر یوکرینی صدر ولادیمیر زیلنسکی کا کہنا تھا کہ ان کا مقصد یوکرین میں روسی جارحیت کے خلاف امن منصوبے کو پیش کرنا ہے، ان کی کوشش ہے کہ اس امن مہم کے لیے زیادہ سے زیادہ ممالک کی حمایت حاصل کی جائے۔

انہوں نے کہا کہ وہ ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان سے ملاقات کریں گے، سعودی عرب کے ساتھ باہمی تعلقات اور تعاون کو فروغ دیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ ان کا ایک مقصد ہے اور یوکرین کے مسائل کے تحفظ کے لیے کوششیں کرنا چاہتے ہیں 2014 میں کرائمیا پر روسی قبضے کے ساتھ ساتھ کر لیا گیا تھا، اور کرائمیا کے مسلمان اس وقت مشکلات کا شکار تھے۔

واضح رہے کہ سعودی عرب میں عرب لیگ کا 32 واں سربراہی اجلاس شروع ہوا جس میں سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان بھی خصوصی طور پر شریک ہوئے۔

عرب لیگ اجلاس میں شامی صدربشارالاسد، اردن کے شاہ عبداللہ دوم بھی شریک ہیں سعودی ولی شہزادہ محمد بن سلمان نے شرکا کا خیرمقدم کیا۔

عرب میڈیا کے مطابق یوکرینی صدر عرب لیگ اجلاس میں کمپنی کے بعد جاپان روانہ ہوں گے جہاں وہ ہیروشیما میں جاری جی سیون اجلاس میں بھی شرکت کریں گے۔

واضح رہے کہ اس وقت عالمی سیاسی و معاشی منظرنامے پر سعودی عرب، جاپان اور چین میں تین انتہائی اہم اتحاد کا اجلاس جاری ہے۔

سعودی عرب کے جدہ میں جاری ‘عرب لیگ اجلاس’ میں عرب کے سربراہان کے راستے پر بہتر مستقبل کے لیے ممالک کے درمیان مضبوط سیاسی و معاشی تعلقات، عرب ایجنڈے کے تحفظات، قومی اور علاقائی مسائل کے حل کے لیے دیگر اہم امور شامل ہیں۔

دوسری جانب جاپان میں جاری ‘جی سیون اجلاس’ میں رکن ممالک یوکرین میں جاری جنگ اور روس کے خلاف نئی سیاسی پابندیوں کے ساتھ دیگر معاشی و مسائل پر غور کریں۔

بین الاقوامی تجارت کے حامل چین میں بلائے گئے ‘چین، وسط اجلاس’ میں چینی صدر نے ایشیائی ممالک سے تجارت کے فروغ کے لیے نئے سرحدی اسٹروکچر اور طے شدہ منصوبے کے معاہدے کے ساتھ مفاہمت کے معاملات اورتعلقات میں وسعت کے معاملات پر بات چیت کی۔ بات کی جار ہی۔

چین میں جاری اجلاس میں کرغستان، تاجکستان، ترکمانستان اور گلگت کے رہنما شریک۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply