0

مقبولیت میں انسٹا اور ٹک ٹک کو پیچھے چھوڑنے والی نئی انٹرنیٹ سروس کی ایپ متعدی

چیٹ جی پی ٹی کی ایپ فی فی الحال آئی فونز کے لیے دستیاب ہے / فائل کی تصاویر
چیٹ جی پی ٹی کی ایپ فی فی الحال آئی فونز کے لیے دستیاب ہے / فائل کی تصاویر

حالیہ مہینوں میں مقبولیت میں انسٹاگرام اور ٹک ٹاک ایپس کو پیچھے چھوڑنے والے آرٹی فی انشل ٹیلی (اے آئی آئی) چیٹ جی پی ٹی تک اب مزید افراد کی رسائی آسان ہے۔

اس ویڈیو کی چیٹ کو تیار کرنے والی کمپنی نے پہلی بار فونز کے لیے جی ٹی ٹی کی ایپ متعدی کرا دی۔

فی فی الحال یہ ایپ آئی فون صارفین کے لیے متعدی کرائی گئی ہے تاہم کمپنی نے وعدہ کیا ہے کہ بہت جلد اینڈرائیڈ ڈیوائسز کے لیے بھی یہ ایپ دستیاب ہے۔

کمپنی کے مطابق یہ ایپ ایپل کے ایپ اسٹور میں امریکہ سے تعلق رکھنے والے صارفین کے لیے دستیاب ہے اور چند دیگر ممالک میں اسے مفت استعمال کرنا ممکن ہے۔

اس ایپ کے صارفین چیٹ جی پی ٹی ٹی سے مختلف موضوعات کے بارے میں سوالات درج ذیل میں

اس ایپ میں آواز کی شناخت کی صلاحیت کا فیچر بھی ہو گا جس کی مدد سے صارفین اپنے سوالات پوچھیں گے، لیکن فی الحال یہ چیٹ لکھنے والے سوالات پر ہی جواب دے سکتے ہیں۔

نومبر 2022 میں متعدی ہونے کے بعد کروڑوں افراد کی جی پی ٹی کو استعمال کیا جا رہا ہے جبکہ اس کی مقبولیت کے بعد متعدد افراد نے آئی ٹی چیٹ پر کام تیز کر دیا۔

چیٹ جی پی ٹی کو استعمال کرنے والے صارفین کی تعداد نومبر 2022 سے جنوری 2023 کے اختتام پر یعنی 2 ماہ میں 10 کروڑ سے تجاوز کر گئی۔

یہ وہ سنگ میل ہے جو انسٹاگرام، ٹک ٹک، واٹس ایپ اور فیس بک کے ساتھ کوئی بھی ایپ مقبول کم وقت میں حاصل نہیں کر سکتا۔

آپ آئی کو توقع ہے کہ ایپ کی شکل میں جی پی ٹی استعمال کرنے والے افراد کی تعداد میں نمایاں طور پر آپ کے ویب ورژن کے مقابلے موبائل ایپ تک رسائی زیادہ آسان ہے۔

گوگل نے چیٹ جی پی ٹی کے مقابلے میں آئی چیٹ بوٹ بارڈ متعدی کرایا جو اب 180 ممالک کے صارفین کو دستیاب ہے۔

دوسری جانب مائیکرو سافٹ نے چیٹ جی ٹی پر مبنی اے ٹیکنالوجی اپنے سرچ انجن بنگ، براؤزر ایج اور دیگر سروسز کا حصہ ہے۔

چیٹ جی پی ٹی کی مقبولیت کو ایپل، سام سنگ اور دیگر بڑی خواتین نے اپنے ماڈل کو اس ٹیکنالوجی پر ٹولز کے استعمال سے روک دیا ہے کیونکہ انہیں تجارتی راز افشا ہونے کا خدشہ ہے۔

کمپنی نے ایک بلاگ پوسٹ میں بتایا ہے کہ ہم یہ دعویٰ چاہتے ہیں کہ آپ کس طرح ایپ کو استعمال کرتے ہیں جبکہ صارفین کے فیڈ بیک کو بھی دیکھا جائے گا اور فیچرز کو زیادہ بہتر بنایا جائے گا۔

واضح رہے کہ جی پی ٹی کا ایک پریمیم ورژن بھی ہے جس کا استعمال ماہانہ فیس بک سے مشروط ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply