0

شہروز کاشف 14 میں سے 12 بلند ترین چوٹیاں سروالے کم عمر کوہ پیما بن گئے

21 شہروز کاشف 8 ہزار میٹر بلند ترین 14 میں سے 12 چوٹیاں سر کرنے والے دوسرے پاکستانی ہیں/فوٹوفائل
21 شہروز کاشف 8 ہزار میٹر بلند ترین 14 میں سے 12 چوٹیاں سر کرنے والے دوسرے پاکستانی ہیں/فوٹوفائل

پاکستان کے کوہ پیما شہروز کاشف بلند ترین 14 میں سے 12 چوٹیاں سر کرنے والے کم عمر ترین کوہ پیما بن گئے ۔

منگما ڈیوڈ شیرپا نے 30 سال کی عمر میں یہ سنگ میل عبور کیا ہے۔

شہروز کو آخری 2 چوٹیاں سر کرنے کے لیے چین کا سفر کرنا ہے۔

شہروز کاشف نے بلند ترین 14 میں سے 12 چوٹیاں آخری سر فہرست ہیں تاہم شہروز مکمل کرنے کے لیے چوایو اور شیشاپنگما سر کرنا باقی ہیں، شہر کے 2 چوٹیاں سر کرنے کے لیے چین کا سفر کرنا ہے۔

تاہم برطانیہ کی ایڈری براونلی نے بھی اس کی تلاش میں ریکارڈ کیا ہے کہ وہ شہروز سے ایک سال بڑی ہیں جب انہیں مزید 4 چوٹیاں سر کرنا باقی ہیں، یہ ریکارڈ اس وقت نیپال کے منگماوڈ ڈیوڈ شیرپا کے پاس ہے کہ 30 سال کی عمر میں تمام 14 ”ایٹ تھاوزز” سر نشان۔

آج داولاگیری کو سرکار شہروز نے 12 بلند ترین چوٹیاں سر کرنے والے کم عمر ترین کوہ پیما پسند کے لیے بھی منگما کا ریکارڈ توڑا، شہروز نیپال میں واقع 8167 میٹر بلند چوٹی کو سرکار وہ 8 ہزار میٹر سے بلند ترین چوٹیاں سر کرنے والے ہیں۔ دنیا کے کم عمر ترین ماونٹینیئر بن گئے۔

داولاگیری سمٹ کے لیے شہروز کاشف نے منگل کی شب پیش قدمی شروع کی اور بدھ کی صبح اس بلند ترین مقام تک پہنچ کر یہ سنگ میل عبور کر لیا۔

شہروز اور سرباز دونوں 12، 12 بلند ترین چوٹیاں سر کر کے

21 شہروز کاشف 8 ہزار میٹر بلند سے 14 میں 12 چوٹیاں سر کرنے والے دوسرے پاکستانی ہیں، ان سے قبل وادی ہنزہ سے تعلق رکھنے والے سرباز علی خان بھی 12 چوٹیاں سر کرچکے۔

شہروز اور سرباز دونوں 12، 12 بلند ترین چوٹیاں سر کر رہے ہیں، شہروز کاشف تمام 14 “ایٹ تھاوزنڈرز” سب سے کم عمر میں سر کرنا چاہتے ہیں۔

17 سال کی عمر میں براڈ پیک سر کرنے والے شہروز کاشف ”براڈ بوائے”

17 سال کی عمر میں براڈ پیک سر کرنے والے شہروز کاشف ”براڈ بوائے” کے نام سے پہچانے گئے ہیں۔

شہروز نے 2019 میں 2021 کے بعد پیک کو سر کرنے کے لیے صرف 19 سال کی عمر میں ماونٹ ایوریسٹ کو سر کیا اور اس کے ٹاپ پر عمر کے بہترین پاکستانی بھی بن گئے، اسی سال انہوں نے ٹو اور مناسلو کو بھی۔ سرکیا۔

گزشتہ برس انہوں نے کہا کہ کنچنجونگا، ملاسے، مکالو، نانگاپربت، گیشربرم اور گیشربرم ٹو کو سر کیا، اس سال کے آغاز میں انہوں نے نیپال میں ماؤنٹ اناپورنا کو سر کیا اور اب داولاگیری سرپل اپنے میری طرف اور قدم آگے بڑھایا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply