0

اب بھی چینی ہم منصب کو’’آمر‘‘ سمجھتا ہوں، جوبائیڈن

سان فرانسسکو: امریکا اور چین نے فوجی سطح پر رابطے بحال کرنے پر اتفاق کیا ہے تاہم ایک اہم ملاقات کے بعد امریکی صدر اب بھی شی جن پنگ کو ’آمر‘ سمجھتے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق سان فرانسسکو میں 4 گھنٹے ملاقات کے بعد امریکی صدر جوبائیڈن اور ان کے چینی ہم منصب شی جن پنگ نے مشترکہ نیوز کانفرنس کی۔

جوبائیڈن نے کہا کہ مسابقت کو تنازعات کی طرف نہیں جانا چاہیے، جب کہ شی جن پِنگ کا کہنا تھا کہ چین امریکا تعلقات دنیا میں سب سے اہم دوطرفہ تعلقات ہیں، ہم دونوں کے پاس ایک دوسرے سے منہ موڑنے کا کوئی آپشن نہیں ہے، کیوں کہ تصادم کے دونوں فریقوں کے لیے ناقابلِ برداشت نتائج ہوں گے۔

اے پی کے مطابق ایک چینی صحافی خاتون کے سوال پر جوبائیڈن نے کہا وہ اب بھی چینی ہم منصب کو آمر سمجھتے ہیں، دونوں صدور نے ظہرانے کے بعد باغ میں ساتھ چہل قدمی بھی کی۔

جو بائیڈن نے اپنی بات کی وضاحت بھی کی، انھوں نے کہا کہ وہ ان معنوں میں ڈکٹیٹر ہیں کہ کیوں کہ وہ ایک ایسے ملک کے سربراہ ہیں جو کمیونسٹ ملک ہے، جس کی حکومت ہماری حکومت سے بالکل مختلف ہے۔

Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply