0

کابل میں دوسال بعد پہلی بین الاقوامی پرواز کی لینڈنگ

یو اے ای کی ایئرلائن فلائی دبئی کی پہلی پرواز دو سال بعد کابل ایئرپورٹ پر لینڈ کرگئی، اس طرح فلائی دبئی افغانستان سے امریکی اور اتحادی افواج کے انخلا کے بعد اپنی سروس بحال کرنے والی پہلی بین الاقوامی ایئرلائن بن گئی ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق اکتوبر میں دو برس کی معطلی کے بعد ایئرلائن کی جانب سے کابل اور متحدہ عرب امارات کے درمیان پروازیں بحال کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔

ایک بیان میں اقدام پر مسرت کا اظہار کرتے ہوئے طالبان کے نائب چیف منسٹر کی جانب سے کہا گیا ہے کہ فلائی دبئی کی پروازوں کی بحالی کو ایک اہم اقدام کے طور پر دیکھا اور سراہا جاتا ہے۔

بین الاقوامی ایئرلائنز نے افغانستان کے لیے اپنی پروازوں کا سلسلہ اگست 2021 میں سابق حکومت کے خاتمے کے بعد بند کر دیا تھا۔

افغان میڈیا گروپ کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ اس وقت دو مقامی ایئرلائنز اریانہ اور کام ایئر ملک میں کام کر رہی ہیں تاہم مسافروں کی جانب سے ان ایئر لائنز سے متعلق مختلف شکایات سامنے آتی رہتی ہیں، جن میں دبئی اور کابل کے درمیان ٹکٹ کی رقم میں بہت زیادہ اضافہ بھی شامل ہے۔

آن لائن ذرائع کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ کابل سے دبئی کے درمیان اکانومی کلاس ٹکٹ کی قیمت تقریباً 450 ڈالر ہے جو کہ دو سال قبل کے مقابلے میں بہت زیادہ ہے۔

اسی طرح کابل اور اسلام آباد کے درمیان پروازوں کے ٹکٹس کی قیمت بھی بہت زیادہ ہے۔

Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply