0

سعودی عرب اور قطر سے سرمایہ کاری کیلئے اہم پیشرفت

اسلام آباد : نگراں وفاقی حکومت نے سعودی عرب اور قطرکے ساتھ دو طرفہ سرمایہ کاری معاہدوں پر مذاکرات کی منظوری دے دی۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق نگران وزیراعظم انوار الحق کاکڑ کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں مختلف معاہدوں اور منصوبوں کی منظوری دی گئی۔

اجلاس میں ایف بی آر کی سفارش پر بینکوں کےغیرمعمولی منافع پر 40فیصد ٹیکس کی منظوری دئی گئی جبکہ انکم ٹیکس آرڈیننس2001میں سیکشن 99ڈی بھی متعارف کرایا گیا ہے۔

اس کے علاوہ ٹریڈ آرگنائزیشنز کے ریگولیٹرز سے متعلق کمیٹی قائم کرنے کی منظوری دے دی گئی, وزیر تجارت کمیٹی کے کنوینئر جبکہ ممبران میں وزیر قانون اور منصوبہ بندی شامل ہوں گے۔

وفاقی کابینہ کے اجلاس میں کانگو، ملاوی، زیمبیا، زمبابوے اور جمہوریہ کرغز کو بزنس ویزا لسٹ میں شامل کرنے کی منظوری دی گئی 18افراد کا نام ای سی ایل سے نکالنے اور9افراد کا نام شامل کرنے کی بھی منظوری دی گئی۔

کابینہ اعلامیے کے مطابق جموں و کشمیر اسٹیٹ پراپرٹی بجٹ برائے مالی سال2023-24کی منظوری دی گئی، رواں سال کے لیے بجٹ 267.590 ملین روپے رکھا گیا ہے۔

اجلاس میں ہانگ کانگ بین الاقوامی کنونشن2009 پر دستخط اور الحاق کے معاہدے کا ڈرافٹ تیار کرنے کی منظوری کے علاوہ فیصلہ کیا گیا کہ بحری جہازوں کی ری سائیکلنگ کے لیے قانون سازی اور اہلکاروں کو تربیت دی جائے گی۔

وفاقی کابینہ کے اجلاس میں ٹریڈنگ کارپوریشن کو یوریا کی عالمی مارکیٹ سے خریداری کے لیے استثنیٰ دینے اور حج پالیسی2024میں ترامیم کی منظوری دے دی۔

Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply