0

اسرائیل کا جبالیہ کیمپ پر حملہ، 30 فلسطینی شہید

غزہ: جنوبی غزہ کے جبالیہ کیمپ پر اسرائیلی حملے کے نتیجے میں 30 فلسطینی شہید اور سیکڑوں زخمی ہوگئے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق غزہ پر اسرائیلی بربریت جاری ہے، جبالیہ کیمپ پر اسرائیلی حملے میں 30 فلسطینی شہید ہوگئے جبکہ خان یونس میں اسرائیل کی بمباری سے 12 گھر تباہ ہوگئے۔

آکسیجن نہ ملنے سے الشفا اسپتال میں سات نومولود دم توڑ گئے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق الشفا اسپتال میں 189 شہیدوں کی اجتماعی تدفین کردی گئی ہے جبکہ غزہ میں شہادتوں کی تعداد 11 ہزار 200 سے تجاوز کرگئی ہے۔

غزہ پر 38 روز سے جاری اسرائیلی جارحیت میں 11 ہزار سے زائد معصوم فلسطینیوں کی شہادت کی تصدیق ہو چکی ہے جب کہ یہ تعداد 20 ہزار تک پہنچنے کا خدشہ ہے۔

غاصب صہیونی ریاست کے 7 اکتوبر کو غزہ پٹی پر شروع ہونے والے فضائی اور زمینی حملوں نے غزہ کو ملبے کا ڈھیر اور انسانوں کا قبرستان بنا دیا ہے۔ اب تک 11 ہزار سے زائد فلسطینیوں کی شہادت کی تصدیق ہوچکی ہے جن میں سے نصف سے زائد تعداد بچوں اور خواتین کی ہے۔

رپورٹ کے مطابق شمالی غزہ کے تمام اسپتالوں پر غاصب اسرائیلی فوج کا قبضہ ہوچکا ہے۔ اسپتالوں میں علاج کی سہولتیں ختم ہونے کے باعث زندگیاں بچانےکا عمل رک گیا ہے، مریض اور زخمی بے یار ومددگار ہیں۔ ہر گھنٹے نومولود اور مریض انتقال کر رہے ہیں۔ اسپتال قبرستان بن چکے ہیں جہاں میتوں کے ڈھیر لگے ہیں لیکن ان کو دفنانے والا کوئی نہیں۔

Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply