منی بجٹ کے اثرات، ٹن پیک دودھ کی قیمت میں اضافہ

13

صدر ہول سیل کیمسٹ کونسل آف پاکستان محمد عاطف نے کہا ہے کہ حالیہ منی بجٹ کے اثرات نے ٹن پیک دودھ استعمال کرنے والے بچوں پر آنا شروع ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق موریناگا نامی کمپنی نے بچوں کے دودھ بی ایف انفینٹ فارمولہ، انفینٹ فارمولہ ٹو اور تھری 400 گرام کے پیک کی قیمت میں 15 روز میں 210 روپے جبکہ 900 گرام پیک کی قیمت میں 450 روپے کا ہوش ربا اضافہ کردیا ہے۔

محمد عاطف بلو نے اس حوالے سے جاری کردہ بیان میں کہا کہ بچوں کو مجبوری میں ڈبے کا دودھ پلانے والے والدین کے لئے اب دودھ ان کی پہنچ سے دور ہوگیا ہے۔

انکا کہنا ہے کہ موجودہ مہنگائی اور  بیروزگاری نے اب لوگوں کا مرنا باقی رکھ دیا ہے، موجودہ حکومت کہ جانب سے منی بجٹ کے آنے کے چند روز میں جس طرح ادویات ساز کمپنیوں اور بچوں کے دودھ پائوڈر بنانے والی کمپنیوں نے جس تیزی سے قیمتوں میں اضافہ کیا ہے اسے فوری واپس لیا جائے۔

صدر ہول سیل محمد عاطف بلو نے کہا کہ جس طرح گذشتہ 3 برس کے دوران ادویات سمیت روزمرہ کی اشیاء کی قیمتوں میں کئی سو فیصد اضافہ ہوا ہے اس کی ملکی تاریخ میں مثال نہیں ملتی۔

انکا مزید کہنا تھا کہ وفاقی وزیر تجارت اور خود وزیر اعظم فوری طور پر جان بچانے والی ادویات اور بالخصوص بچوں کے دودھ پاؤڈر کی قیمتوں کا فوری نوٹس لیتے ہوئے اس اضافہ کو واپس لینے کی ہدایات جاری کریں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.