لاہورمیں نامعلوم افراد نے لیڈی ڈاکٹر کو 3 بچوں سمیت قتل کردیا

21

ملزمان فرار، ڈاکٹر ناہید نے گھر میں ہی کلینک بنا رکھا تھا، آئی جی کا نوٹس ،رپورٹ طلب
 فوٹو : فائل

ملزمان فرار، ڈاکٹر ناہید نے گھر میں ہی کلینک بنا رکھا تھا، آئی جی کا نوٹس ،رپورٹ طلب
فوٹو : فائل

 لاہور: کاہنہ کے علاقے میں نامعلوم سفاک قاتلوں نے ماں کو دو بیٹیوں اور بیٹے سمیت گولیاں مار کر قتل کردیا جب کہ مقتولہ کے گھر کے باہر مشکوک گاڑی کی سی سی ٹی وی فوٹیج منظر عام پر آگئی۔

کاہنہ کے علاقے میں نامعلوم افراد نے گھر میں گھس کر فائرنگ کرکے گھر کی مالکن45 سالہ ناہید مبارک ،20 سالہ بیٹے تیمور سلطان، 15 سالہ بیٹی ماہ نور فاطمہ اور 10 سالہ جنت فاطمہ کو موت کے گھاٹ اتار دیا جبکہ ملزمان موقع سے فرار ہو گئے۔

واقعے کی اطلاع پر پولیس کے اعلیٰ افسران بھاری نفری کے ہمراہ موقع پر پہنچ گئے اور لاشوں کو پوسٹ مارٹم کے لیے منتقل کر کے جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کر کے تفتیش کا آغاز کر دیا۔

اطلاع ملنے پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر فرانزک اور دیگر ٹیوں سے ملکر جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کر لیے۔ 4 افراد کے قتل کی اطلاع جنگل میں آگ کی طرح علاقہ میں پھیل گئی۔

علاقہ میں شدید غم و خوف کی لہر دوڑ گئی۔ایس ایس پی آپریشن و انویسٹی گیشن سمیت دیگر افسران نے موقع پر پہنچ کر معائنہ کیا۔ آئی جی پنجاب نے ماں بچوں کے سفاکانہ قتل کا نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او لاہور سے رپورٹ طلب کر لی اور ملزمان کی فوری گرفتاری کا ٹاسک سونپا گیاہے۔ کاہنہ پولیس نے چاروں لاشوں کو پوسٹ مارٹم کے لیے منتقل کر کے تفتیش کا آغاز کر دیا۔

 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.